If the prices have to be increased, they will be increased, Finance Minister

 

If the prices have to be increased, they will be increased, Finance Minister

Finance Minister Miftah Ismail said in a press conference that we have to work together for the betterment of the country. If the prices have to be increased again, then they will be increased. The friendly country will soon invest 1.5 billion dollars in Pakistan, and will get a financial package. A loan of 1.2 billion dollars will be received from a friendly country.


 وفاقی وزیرخزانہ مفتاح اسماعیل  کا کہنا تھا کہ دوست ملک جلد پاکستان میں 1.5 ارب ڈالر کی سرمایہ کاری کرے گا، انہوں نے یہ بھی کہا کہ دوبارہ قیمتیں بڑھانا پڑیں تو بڑھائیں گے۔

وزیرخزانہ مفتاح اسماعیل نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ ملک کی بہتری کے لئے مل کر کام کرنا ہوگا۔اگر  دوبارہ قیمتیں بڑھانا پڑیں تو بڑھائیں گے۔دوست ملک جلد پاکستان میں 1.5 ارب ڈالر کی سرمایہ کاری کرے گا، مالیاتی پیکج ملے گا۔ایک دوست ملک سے 1.2 ارب ڈالر کا ادھار تیل ملے گا۔

مفتاح اسماعیل نے کہاکہ عمران خان نے اپنے دوستوں کو ایمنسٹی دی ملک کے لئے کچھ نہیں کیا۔آئی ایم ایف سے کیا گیا معاہدہ بھی عمران خان نے خود توڑا۔تحریک انصاف کے دور میں بجٹ خسارہ بڑھا۔ بجٹ خسارے کے لئے کہیں سے رقم پوری کرنی پڑتی ہے۔ فیول مہنگا ہونے پر  عمران خان شمسی توانائی  کی طرف نہیں گئے۔ حکومت کو پاور سیکٹر میں 1300 ارب روپے کا نقصان ہو رہا ہے۔ پاکستان میں گیس کی لوڈشیڈنگ نہیں سنی تھی یہ بھی عمران خان کی وجہ سے ہے۔ انہوں نے وعدہ کیا تھا ٹیکس محصولات کو د گنا کریں گے نہیں کر سکے۔

عمران خان کی حکومت گئی تو ملک بحران میں تھا اوردیوالیہ پن کی طرف جا رہا تھا۔ ہماری کوشش ملک میں معاشی استحکام لانا تھا ہم اس میں کامیاب ہوگئے ہیں۔اس استحکام کے بعد عوام کی خوشحالی آئے گی۔ میرا وعدہ ہے ہم افراط زر کو کم کریں گے۔اگلے سال گرمیوں میں بجلی کی لوڈ شیڈنگ نہیں ہو گی۔آئندہ مالی سال تک زرمبادلہ کے ذخائر میں بہتری آئے گی۔










حوالہ

Advertisement


Advertisement