200 ID cards recovered from PTI worker in by-elections, Lahore

 

ضمنی انتخابات ، لاہور میں پی ٹی آئی کارکن سے 200 شناختی کارڈز برآمد

Lahore, Islamabad (Monitoring Desk, NNI) About 200 identity cards were recovered from a worker of Pakistan Tehreek-e-Insaaf from the factory area of Lahore. According to the police, the accused Khalid Sindhu planned to buy votes through identity cards in PP 168. was closing.


لاہور، اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک ، این این آئی )لاہور کے فیکٹری ایریا سے پاکستان تحریک انصاف کے کارکن سے تقریباً 200 شناختی کارڈز برآمد کر لیے گئے۔پولیس کے مطابق ملزم خالد سندھو پی پی 168 میں شناختی کارڈز کے ذریعے ووٹ خریدنے کی منصوبہ بندی کر رہا تھا۔

ملزم کے خلاف مقدمہ درج کر لیا گیا ہے۔پولیس کا کہنا ہے کہ ملزم نے پی پی 168 لاہور کی مختلف یوسیز میں ووٹروں کے شناختی کارڈ لےکر انہیں پیسے دیے۔پولیس کے مطابق ملزم خالد سندھو نے بتایا کہ ان لوگوں کی ڈیمانڈ تھی اور ہر کارڈ کے عوض پیسے دینے کی ڈیل ہوئی تھی، ڈیل یہ تھی کہ ہر کارڈ پر اتنے پیسے دیں تو ووٹ ڈالیں گے، اس لیے کارڈ اکٹھے کیے تھے کہ ہر کارڈ کے عوض کسی کو 2 اور کسی کو 3 ہزار روپے دینے تھے۔دوسری جانب وفاقی وزیر فواد چوہدری نے کہا ہے کہ سابق وزیر علی امین گنڈاپور کے پنجاب داخلے پر پابندی انسانی حقوق کی خلاف ورزی ہے ۔ اپنے بیان میں انہوںنے کہاکہ امین گنڈاپور کے پنجاب داخلے پر پابندی نہ صرف بنیادی انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزی ہے بلکہ اس سے وفاق کے اتحاد اور یگانگت کو نقصان پہنچے گا، علی امین نے تمام زندگی لاہور میں گزاری ۔ انہوں نے کہاکہ علی امین نے گورنمنٹ کالج لاہور اور این سی اے سے پڑھائی کی۔ سابق وزیر نے کہاکہ اب پنجاب میں ان پر داخلے کی پابندی ماحول خراب کرنے کی کوشش ہے۔









حوالہ

Advertisement


Advertisement